پاکستان سرمایہ کاری کیلئے دنیا کے صفحہ اول کے ممالک میں شامل ہورہا ہے؛ گورنر سندھ

لندن (اکرم عابد) دنیا بھر میں کورونا لاک ڈائون پابندیوں کی وجہ سے یوکے پاکستان بزنس کونسل کی جانب سے اوورسیز کی پہلی آن لائن یو کے پاکستان انویسٹمنٹ کانفرنس 2020 کا انعقاد کیا گیا ۔ جس میں مہمان خصوصی گورنر سندھ عمران اسماعیل ، وزیراعظم پاکستان کے ترجمان برائے تجارت یوکے اور یورپ صاحبزادہ اے جہانگیر ، چیئرمین یو کے پاکستان بزنس کونسل جاوید ملک اور منسٹر ٹریڈ اینڈ انوسٹمنٹ پاکستان ہائی کمیشن لندن شفیق شہزاد سمیت متعدد شخصیات نے شرکت کی اور پاکستان میں بیرونی سرمایہ کاری کے حوالے سے مواقع کا جائزہ لیا۔

کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے گورنر سندھ عمران اسماعیل نے کہا کہ پاکستان اس وقت ترقی کی منازل طے کر رہا ہے انہوں نے کہا کہ سرمایہ کاری کے حوالے سے یقینی طور پر پاکستان کے اندر بہت بڑے لیول پر تبدیلی آ رہی ہے گورنر سندھ عمران اسماعیل نے کہا کہ عمران خان کی قیادت میں بیرون ملک سے آنے والے سرمایہ کار اب پاکستان پر اعتماد کر رہے ہیں گورنر عمران اسماعیل نے یہ بھی کہا کہ یہ میں نہیں کہہ رہا وقت بتا رہا ہے کہ پاکستان نہ صرف دیگر شعبہ جات میں بلکہ پراپرٹی اور اس سے منسلک سرمایہ کاری کے حوالے سے ایک بہترین ملک سمجھا جا رہا ہے انہوں نے اپنے خطاب میں اورسیز بزنس کمیونٹی کو پاکستان میں سرمایہ کاری کے حوالے سے دعوت بھی دی، انہوں نے کہا کہ وزیراعظم پاکستان کا مشن ہم سب مل کر مکمل کر سکتے ہیں اور یہ مشن ہے کہ پاکستان کو ایک انتہائی اہم اور ترقی یافتہ ملک بنایا جائے ۔

ترجمان وزیراعظم پاکستان ٹریڈ اینڈ انویسٹمنٹ برائے یورپ صاحبزادہ جہانگیرنے کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ اوورسیز میں رہنے والی بزنس کمیونٹی جب پاکستان میں سرمایہ کاری کی بات کی جائے تو وہ اکثر گارنٹی مانگتی تھی لیکن عمران خان پر پوری دنیا نے آنکھیں بند کر کے اعتماد کیا اس کی واضح مثال نمل یونیورسٹی، شوکت خانم ہسپتال اور دیگر پروجیکٹ ہیں جن کو عمران خان نے نہ صرف شروع کیا بلکہ پایہ تکمیل تکمیل تک پہنچایا اور آج وزیراعظم عمران خان خود ایک بہت بڑی گارنٹی ہیں ہراس سرمایہ دار کے لیے جو پاکستان میں آ کر سرمایہ داری کرنا چاہتا ہے۔

چیئرمین یو کے پاکستان بزنس کونسل جاوید ملک نے کہا کہ اوورسیز پاکستانی وطن کے ساتھ ہر لحاظ سے ہمیشہ مخلص رہے ہیں سرمایہ کاری کا شعبہ ہو یا کوئی اور جب بھی پاکستان کو اوورسیز پاکستانیوں کی ضرورت پیش آئی ہے تو انہوں نے ہمیشہ صفحہ اول پر رہتے ہوئے ہر قسم کی قربانی دی ہے۔


پاکستان ہائی کمیشن لندن کے منسٹر ٹریڈ اینڈ انویسٹمنٹ شفیق شہزاد میں خطاب کرتے ہوئے کہا کہ موجودہ حالات میں بہت سے نئے سیکٹرز اور شعبہ جات سامنے آئے ہیں جس میں ہم پاکستان کی ایکسپورٹ کو بڑھا کر پوری دنیا کے سامنے رکھ سکتے ہیں اور اس سلسلہ میں اوورسیز بزنس کمیونٹی کا خاص تعاون درکار ہوگا۔

کانفرنس کی نظامت کونسل کے جنرل سیکریٹری عطا الحق نے کی اور کہا جیسے ہی حالات نارمل ہوتے ہیں پاکستان بزنس کونسل لندن میں اس کانفرنس کے عملی انعقاد کو ممکن بنائے گا تاکہ وطن عزیز پاکستان میں زیادہ سے زیادہ سرمایہ کاری لائی جاسکے۔

50% LikesVS
50% Dislikes