تیسرا ٹیسٹ؛ موسم کی وجہ سے پاکستان شکست سے بچ گیا،اینڈرسن نے عالمی ریکارڈ بنالیا

سائوتھ ہمپٹن (مسرت اقبال) بارش کا سہارہ لیکر بالآخر پاکستانی ٹیم شکست کا سامنا کرنے سے بچ گئی۔ تیسرا ٹیسٹ ڈرا ہونے کی وجہ سے انگلینڈ نے یہ سیریز ایک صفر سے جیت لی۔ اس میچ کی اہم بات اینڈرسن کا عالمی ریکارڈ ہے جسکے مطابق وہ دنیا کے پہلے فاسٹ بائولر بن گئے جس نے چھ سو وکٹیں حاصل کی ہوں۔، اسی طرح پاکستانی بائولر محمد رضوان ایک اننگ میں چھ وکٹیں حاصل کرکے اور باقی ٹیسٹوں میں بھی اچھی کارکردگی کی بنا پر مین آف دی سیریز قرار پائے

Jimmy Anderson's 600th Test Wicket

6️⃣0️⃣0️⃣Scorecard/Videos: http://ms.spr.ly/6182TqJuY#ENGvPAK

Posted by England Cricket on Tuesday, 25 August 2020


آخری ٹیسٹ میچ میں فالو آن کا شکار ہونے کے بعد پاکستان نے چار وکٹوں کے نقصان پر 187 رنز بنا ئے۔
بابر اعظم 63 رنز بنا کر ناٹ آؤٹ رہے اور اس کے ساتھ ساتھ ان کے ٹیسٹ کرکٹ میں 2000 رنز بھی مکمل ہو گئے ہیں۔

میچ کے پانچویں دن کا کھیل شروع ہوا تو کپتان اظہر علی تھوڑی ہی دیر کے بعد 31 رنز بنا کر اینڈرسن کی گیند پر کیچ آؤٹ ہو گئے۔ یہ وکٹ حاصل کرنے کے بعد اینڈرسن نے ٹیسٹ کرکٹ میں 600 وکٹیں بھی مکمل کر لی ہیں جبکہ اسد شفیق 21 رنز بنا پائے تھے کہ روٹ کی گیند پر کیچ آؤٹ ہو گئے۔
ساؤتھمپٹن ٹیسٹ میں جیمز اینڈرسن نے تباہ کن بولنگ کی، اور پہلی اننگز میں پاکستان کے پانچ کھلاڑیوں کو پویلین کی راہ دکھائی۔
دوسری اننگز میں پاکستانی کپتان اظہر علی کی وکٹ حاصل کر کے انہوں نے ایک اور اعزاز اپنے نام کر لیا۔

وہ ٹیسٹ میں چھ سو وکٹیں لینے والے دنیا کے پہلے فاسٹ بولر جبکہ مجموعی طور پر یہ کارنامہ سرانجام دینے والے دنیا کے چوتھے بولر بن گئے۔
انھوں نے یہ اعزاز 156ویں ٹیسٹ میں حاصل کیا۔ سب سے زیادہ وکٹیں حاصل کرنے والوں کی فہرست میں اینڈرسن کا چوتھا نمبر ہے۔
سری لنکا کے مرلی دھرن 800 وکٹوں کے ساتھ پہلے نمبر پر ہیں، آسٹریلیا کے شین وارن کی 708 اور بھارت کے انیل کمبلے کی 619 وکٹیں ہیں لیکن یہ تینوں سپنرز تھے۔

50% LikesVS
50% Dislikes