برطانوی اپوزیشن لیبر پارٹی کے ممتاز ممبران پارلیمنٹ لیبر فرینڈز آف کشمیر گروپ میں شامل

بریڈفورڈ ( محمد فیاض بشیر) برطانیہ کی پارلیمنٹ کے متعدد لیبر ممبران نے ’’لیبر فرینڈز آف کشمیر گروپ ‘‘ میں شمولیت اختیا کرلی ہے ۔ لیبر فرینڈز آف کشمیر کے چیئرمین ایم پی اینڈریو گوون کی کوششوں سے متعدد ممبران پارلیمنٹ نے لیبر فرینڈز آف کشمیر گروپ کے پلیٹ فارم سے کشمیر کاز کو سپورٹ کرنے اور مسئلہ کشمیر کے پر امن حل کے لئے کام کرنے کا عزم کیا۔ اس موقع پر لیبر فرینڈز آف کشمیر کا پہلا افتتاحی اجلاس منعقد ہوا جس میں لیبر پارٹی کے 20سے زائد ممبران پارلیمنٹ نے شرکت کی۔

افتتاحی اجلاس میں چیئرمین لیبر فرینڈز آف کشمیر ایم پی اینڈریو گووِن نے ایم پی شبانہ محمود ، ایم پی ناز شاہ، ایم پی سیم ٹیری اور ریچل ہوپکنز کو لیبر فرینڈز آف کشمیر کی ایگزیکٹو باڈی کا ممبر جب کہ لیبر پارٹی کی نیشنل ایگزیکٹو کمیٹی کی ممبر کونسلر یاسمین ڈار کو لیبر فرینڈز آف کشمیر کا وائس چیئرمین بنایا۔ واضح رہے کہ برطانیہ کے گذشتہ الیکشن میں جموں و کشمیر تحریک حق خود ارادیت انٹر نیشنل کی ٹیم نے انتخابات کے موقع پر لیبر پارٹی کے اندر لابی مہم چلائی اور ایم پی اینڈریو گوون سے گروپ بنانے کی اپیل کی تھی جس پر ایم پی اینڈریو گوون نے’’لیبر فرینڈز آف کشمیر‘‘ کی بنیاد رکھی ۔ تحریک حق خود ارادیت کے سیکرٹری جنرل محمد اعظم اور برطانیہ کی چیئرپرسن کونسلر یاسمین ڈار اور دیگر کی کاوشوں اور لابی سے ممکن ہوا ۔

اس موقع پر گروپ کے افتتاحی اجلاس میں لیبر فرینڈز آف کشمیر پارلیمنٹری لیزن کمیٹی کے اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے گروپ کے چیئرمین ایم پی اینڈریو گوون نے کہا کہ مزید پارلیمنٹری ساتھیوں کی گروپ میں شمولیت خوش آئند ہے ۔ لیبر فرینڈز آف کشمیر گروپ کے ممبران دنیا بھر میں مسئلہ کشمیر کے حل اور اس مسئلہ کو اجاگر کرنے کے لئے اپنی صلاحیتوں کا بھرپور مظاہرہ کریں گے ۔ انہوں نے کہا کہ شبانہ محمود ، ناز شاہ ، سیم ٹیری اور ریچل ہوپکنز اپنے کام میں باصلاحیت ہیں اور پہلے بھی انہوں نے ہر سطح پر کشمیر کاز کے لئے اپنا کردار ادا کیا ہے۔ ان کی شمولیت سے گروپ مزید مضبوط ہو گا ۔ ہم کشمیریوں کے حق خود ارادیت کی حمایت کرتے ہیں اور ہم کشمیریوں کے بنیادی حق کو دلانے کے لئے برٹش پارلیمنٹ ، برطانیہ سمیت دنیا بھر میں اپنا کردار ادا کریں گے۔

اس موقع پر گروپ کے افتتاحی اجلاس میں اعلان کیا گیا کہ ایم پی لیام بائرن اور ممبر اسکاٹش پارلیمنٹ انس سرور ویسٹ مڈ لینڈ اور سکاٹش پارلیمنٹ میں لیبر فرینڈز آف کشمیر کے نمائندے ہوں گے ۔چیئرمین گروپ ایم پی اینڈریو گووِن نے مزید کہا کہ ہم جموں و کشمیر میں امن ، استحکام اور کشمیریوں کے حق خود ارادیت کے لئے بھرپور کردار ادا کریں گے اور کشمیریوں کے حق میں برٹش پارلیمنٹ سمیت ہر سطح پر آواز بلند کریں گے ۔ اس وقت دنیا میں کشمیر سب سے زیادہ فوجی تسلط والا خطہ ہے جہاں سے فوجی انخلاء از حد ضروری ہے ،لیبر پارٹی کے اندر بلکہ قومی اور لوکل کونسلز کے انتخابات میں بھی کشمیریوں کی سپورٹ کے لئے نوجوانوں اور خواتین کو متحرک کیا جائے گا ۔ لیبر فرینڈز آف کشمیر گروپ کی افتتاحی تقریب میں 20سے زائد لیبر ممبران پارلیمنٹ نے شرکت کی ۔ اس موقع پر اجلاس میں لیبر فرینڈز آف کشمیر کے نیشنل کوآرڈینیٹر سابق ممبر یورپین پارلیمنٹ واجد خان ، جنرل سیکرٹری وسیم ظفر نے شرکاء کو گروپ کے اغراض و مقاصد سے آگاہ کیا اور جنوبی ایشیاء میں امن کے لئے گروپ کے کردار پر روشنی ڈالی ۔

دوسری جانب جموں و کشمیر تحریک حق خود ارادیت کی ٹیم نے گروپ کے افتتاحی اجلاس اور مزید ممبران کی لیبر فرینڈز آف کشمیر گروپ میں شمولیت کو خوش آئند قرار دیتے ہوئے اسے مسئلہ کشمیر کےلئے سفارتی سطح پر ایک پیش رفت قرار دیا ۔ جموں و کشمیر تحریک حق خود ارادیت انٹر نیشنل کے چیئرمین راجہ نجابت حسین ، سرپرست اعلیٰ سردار عبد الرحمن خان ، سیکرٹری جنرل محمد اعظم ، چیئرپرسن برطانیہ کونسلر یاسمین ڈار ، امجد حسین مغل ، ذیشان عارف ، شاہدہ جرال ، عبد الوہاب قادری ، آسیہ حسین ، روبینہ خان ، کونسلر صبیحہ خان ، کونسلر نویدہ خان ، کونسلر نازیہ رحمان ، کونسلر عاصم رشید اور سابق لارڈ میئر بریڈ فورڈ راجہ غضنفر خالق اور دیگر نے لیبر فرینڈز آف کشمیر کے چیئرمین ایم پی اینڈریو گوون اور دیگر ممبران کو خراج تحسین پیش کیا کہ انہوں نے ایک بہترین قدم اٹھا کر مظلوم کشمیریوں کے لئے آواز اٹھانے کا عزم کیا ،مذکورہ شخصیات نے کہا کہ ہمیں امید ہے کہ لیبر فرینڈز آف کشمیر کے ممبران ہر سطح پر اپنا کردار ادا کرتے ہوئے کشمیریوں کے حق میں بھرپور آواز بلند کریں گے ۔

50% LikesVS
50% Dislikes