بریگزٹ کے بعد طبی عملے کی برطانیہ آمد کیلئے حکومت کی خصوصی پالیسی تیار – Kashmir Link London

بریگزٹ کے بعد طبی عملے کی برطانیہ آمد کیلئے حکومت کی خصوصی پالیسی تیار

لندن (کشمیر لنک نیوز) بریگزٹ کے بعد برطانوی حکومت پہلی دفعہ میڈیکل شعبے سے وابستہ افراد کیلئے ویزہ اسکیم کا اعلان کرنے کا ارادہ رکھتی ہے۔
نئی ہیلتھ اینڈ کئیر ویزا پالیسی کے تحت ملک میں طبی عملے کی کمی کو پورا کرنے کے لیے خصوصی ویزے جاری کیے جائیں گے۔ ان خصوصی ویزوں کے تحت غیر ملکی طبی عملے اور ڈاکٹرز کو برطانیہ منتقل ہونے کی اجازت دی جائے گی۔
سیاسی ماہرین اسے حکومت کا پہلا بڑا یوٹرن قرار دے رہے ہیں۔
اس پالیسی کے تحت برطانیہ آنے والے ملازمت پیشہ افراد اور ان کے اہل خانہ کو فاسٹ ٹریک اور کم لاگت کے ساتھ برطانیہ میں نوکری کرنے اور منتقل ہونے کی اجازت دی جائے گی۔
اس سے قبل برطانوی وزیر داخلہ کی جانب سے کہا گیا تھا کہ برطانیہ صرف این ایچ ایس سے تعلق رکھنے والے ڈاکٹرز کو ویزا جاری کرے گا جس کے بعد طبی عملے کی جانب سے احتجاج کیا گیا تھا۔
واضع رہے طبی عملہ اور ہسپتالوں میں نگہداشت کرنے والے افراد برطانیہ میں کرونا کی وبا کے خلاف اہم کردار ادا کر رہے ہیں جو این ایچ ایس کی ویزہ پالیسی کے تحت نہیں تھے۔
خصوصی قوانین کے بغیر وہ جنوری 2021 سے برطانیہ داخلے کے لیے ضروری کم سے کم 25 ہزار 600 پاونڈز کی تنخواہ نہ ہونے کی صورت میں یہ اجازت نہ حاصل کر پاتے۔
برطانوی اخبار دی انڈی پینڈنٹ کے مطابق اس میں بہتری لانے کیلئے برطانوی وزیر داخلہ پریتی پٹیل پیر کو نئی پالیسی کا اعلان کرینگی۔