ماسک پہننے کی لازمی حکومتی پالیسی کے خلاف ہائیڈ پارک میں احتجاجی مظاہرہ – Kashmir Link London

ماسک پہننے کی لازمی حکومتی پالیسی کے خلاف ہائیڈ پارک میں احتجاجی مظاہرہ

لندن (عدیل خان سے) لندن کے تاریخی ہائیڈ پارک میں ہزاروں کی تعداد میں لوگوں نے لازمی ماسک پہننے کی حکومتی پالیسی کے خلاف مظاہرہ کیا، عوام کا کہنا تھا کہ یہ پابندی انکے بنیادی حقوق کی خلاف ورزی ہے۔
مظاہرے سے قبل مختلف شعبہ ہائے زندگی سے تعلق رکھنے والے خواتین و حضرات نے خطاب کیا اور حکومت پر زور دیا کہ ماسک زبردستی پہنانے کے بجائے یہ چوائس عوام پر چھوڑ دی جائے وہ اپنی جان کی حفاظت بہتر کرسکتے ہیں۔


بعدازاں مظاہرین نے ماسک پہننے اور بے جا لاک ڈائون کے خلاف شدید نعرے بازی کی، یاد رہے شاپنگ مالز میں لازمی ماسک پہننے کی پابندی کا اطلاق چوبیس جولائی سے ہوگا اور ایسا نہ کرنے والے کو موقع پر ہی سو پائونڈ جرمانہ کیا جائے گا۔
چودہ دن میں جرمانے کی ادائیگی پر پر اسے کم کرکے پچاس پائونڈ تک کردیا جائے گا لیکن دو ہفتوں کی ڈیڈ لائن گذرنے کے بعد سو پائونڈ ہی ادا کرنا ہونگے۔
اس حوالے سے بہت سے لوگوں نے کہا تھا کہ ماسک پہن کر سنہیں سانس لینے میں دشواری ہوتی ہے تاہم طبی ماہرین نے اس غلط فہمی کا بھی ازالہ کردیا اور ثابت کیا کہ ایسا کچھ نہیں ہوتا۔
مظاہرے کی ایک منتظم جماعت کیپ بریٹین فری کے ترجمان کا کہنا تھا کہ یہ قانون سراسر سول آزادی کے خلاف ہے۔


مظاہرے کی ایک منتظم لی بٹلر سمتھ کا کہنا تھا درحقیقت حکومت عوام کو ڈرا رہی ہے کہ اسکے پاس اور کوئی چوائس نہیں، حکومت اگر واقعی عوام کی جانوں کی حفاظت چاہتی ہے تو اسے ڈرانے کی بجائے عوام سے رحم دلانہ رویہ اپنانا ہوگا۔