جامعہ اسلامیہ رضویہ بریڈفورڈ میں تقریب، عالم اسلام سے مشترکہ افواج فلسطین اور کشمیر میں بھیجنے کا مطالبہ – Kashmir Link London

جامعہ اسلامیہ رضویہ بریڈفورڈ میں تقریب، عالم اسلام سے مشترکہ افواج فلسطین اور کشمیر میں بھیجنے کا مطالبہ

بریڈفورڈ (فیاض بشیر) برطانیہ کے مقتدر علمائے اہلسنت نے فلسطینیوں کے خلاف اسرائیل کے حملوں اور بیت المقدس کی بے حرمتی اور نمازیوں پر تشدد کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے عالمی برادری اور انسانی حقوق کے علمبرداروں سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ اپنی خاموشی توڑیں اور بیت المقدس میں قیام امن کے لیے اپنا کردار ادا کریں۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے جامعہ اسلامیہ رضویہ بریڈفورڈ میں منعقد عید مِلن تقریب میں کیا۔

درود و سلام سے معطر اس محفل میں عالم اسلام سے مطالبہ کیا گیا کہ وہ اپنی مشترکہ افواج فلسطین اور کشمیر میں روانہ کرے اور بدترین انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں کو رکوانے میں اپنا کردار ادا کرے کیونکہ اس وقت فلسطین اور کشمیر میں بدترین نسل کشی اورمظالم کے پہاڑ ڈھائے جا رہے ہیں۔

مرکزی سنی جمعیت علماء برطانیہ کے زیر اہتمام ہونے والی اس تقریب کی صدارت مفتی اسلم بندیالوی نے کی جبکہ نظامت کے فرائض علامہ محمد سجاد رضوی نے ادا کیے،اجلاس میں مقبوضہ کشمیر میں بدترین انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے مطالبہ کیا کہ مسئلہ کشمیر اقوام متحدہ کی قراردادوں کی روشنی میں حل کیا جائے اور بین الاقوامی ذرائع ابلاغ کو مقبوضہ کشمیر میں جانے کی اجازت دی جائے تاکہ دنیا کو صحیح صورت حال معلوم ہو سکے۔

تقریب میں ایک قرار داد کے ذریعے حکومت پاکستان سے بھی مطالبہ کیا گیا کہ تحریک لبیک کے گرفتار کارکنوں کو فوری رہا کرے اور ان کے خلاف مقدمات ختم کیے جائیں، اجلاس میں مفتی انصر القادری ، علامہ محمد طیب نقشبندی ،علامہ محمد فاضل بندیالوی ،علامہ مقصود احمد علامہ سید عرفانی میاں ،علامہ صابر علی صابر ،علامہ نوید جمیل شامی ،علامہ شاہد علی ،علامہ محمد راشد،علامہ محمد بلال نوشاہی ،حافظ عبدالقادر نوشاہی کے علاوہ دیگر علماء نے بھی شرکت کی۔

علمائے کرام کا کہنا تھا کہ اس وقت مسلمان باہم ایک دوسروں کے معاملات میں الجھنے کی بجائے انہیں اپنی صفوں میں اتحاد و اتفاق پیدا کرکے عالمگیر مذہب کی حقانیت اور تعلیمات پر عمل پیرا ہونے کی ضرورت ہے، آخر میں امت مسلمہ فلسطین کی آزادی کے لیے خصوصی دعا کی گئی۔

50% LikesVS
50% Dislikes