یارکشائر کی خاتون سندس عالم کا ایم پی ناز شاہ کو قتل کی دھمکیاں بھیجنے کا اعتراف – Kashmir Link London

یارکشائر کی خاتون سندس عالم کا ایم پی ناز شاہ کو قتل کی دھمکیاں بھیجنے کا اعتراف

بریڈفورڈ (کشمیر لنک نیوز )یارکشائر کی 30 سالہ خاتون سندس عالم نےبریڈ فورڈ ویسٹ کی ایم پی ناز شاہ کو جان سے مارنے کی دھمکیاں بھیجنے کا اعتراف کر لیا جس کی وجہ سے ناز شاہ کے بچوں کو محفوظ مقام پر منتقل ہونا پڑا، میڈیا کے مطابق یارک کراؤن کورٹ نے اس بات کی تصدیق کی کہ پرنس ویل اسٹریٹ، بریڈفورڈ کی سندس عالم نے اپنے مقدمے کی سماعت کے دوران بدنیتی پر مبنی ای میلز بھیجنے اور انصاف کے راستے کو بگاڑنے کے تین الزامات کا اعتراف کیا، اب اسے حراست میں لے لیا گیا اور اسے 29 نومبر کو سزا سنائی جائے گی۔

لیبر پارٹی کی ایم پی ناز شاہ جو کمیونٹی ہم آہنگی کی شیڈو وزیر بھی ہیں، نے بتایا کہ کس طرح ان کے بچے آدھی رات کو اس وقت اپنے گھر سے نکلنے پر مجبور ہوئے جب انہیں ای میل موصول ہوئی کہ کیا آپ کو اپنی کھڑکی سے گولی چاہئے یا آپ کے سر میں رائفل، کیوں نہ آپ کا قصہ تمام کر دیا جائے ،دانشمندی سے انتخاب کریں فوری طور پر آتشیں اسلحے کی دھمکی کے بعد 999 ڈائل کیا، انہوں نے کہا کہ وہ اپنے بچوں کی حفاظت کے لیے بہت فکر مند ہو گئیں اور انھیں فوری محفوظ مقام پر بھیج دیا کیونکہ دھمکیاں اس قدر براہ راست اور مخصوص تھیں کہ مجھے یقین تھا کہ وہ شخص جس نے دھمکیاں بھیجی ہیں مجھے مارنے کی حقیقی منصوبہ بندی کر رہا ہے۔

دوران مقدمہ استغاثہ کا الزام ہے کہ تمام ای میلز 30 سالہ سندس عالم نے اپنے سابق لائن مینجر اور دیگر کو مشکلات میں ڈالنے کے لیے بھیجی تھیں، جیوری نے سنا کہ منیجر اور ان کے خاندان کے دو افراد کو ناز شاہ کے 999 پر کال کرنے کے چار گھنٹے بعد مسلح پولیس نے گرفتار کیا اور ای میلز بھیجنے کے شبہ میں 20 گھنٹے تک حراست میں رکھا، پرنس ویل اسٹریٹ، لجٹ گرین، بریڈ فورڈ کی 30 سالہ سندس عالم کو 5 اپریل کو گرفتار کیا گیا تھا، اس پر بدنیتی پر مبنی ای میلز بھیجنے کے تین الزامات اور انصاف کی راہ کو بگاڑنے کے الزامات عائد کئے گئے۔

ناز شاہ جمعرات کو یارک کراؤن کورٹ میں 30 سالہ سندس عالم کے بریڈ فورڈ ویسٹ ایم پی کو جان سے مارنے کی دھمکیاں بھیجنے کے حوالے سے متعدد الزامات کا اعتراف کرنے کے بعد مقامی میڈیا سے بات کر رہی تھیں ،ناز شاہ نے کہا مجھے خوشی ہے کہ یہ معاملہ اب ختم ہو گیا ہے اور میں اپنے کام پر واپس جا سکتی ہوں، ناز شاہ کا کہنا تھا کہ پانچ سال میں دو ممبران پارلیمنٹ کے کھونے کے بعد جان سے مارنے کی دھمکیاں انتہائی تشویشناک تھیں۔

ہوم سیکرٹری کی جانب سے ایم پیز کے لیے حفاظتی اقدامات کے جائزے کا خیرمقدم کرتی ہوں، ممبران پارلیمنٹ کو دھمکیاں ،بدسلوکی اور حملوں کے کلچر کو روکنا ہو گا، ویسٹ یارکشائر پولیس کے تعاون کی شکر گزار ہوں، اپنی صلاحیت کے مطابق بریڈفورڈ ویسٹ کی بھرپور نمائندگی کرتی رہوں گی، عوام کی خدمت کرنا ایک اعزاز اور فرض ہے، عوامی خدمات سے توجہ ہٹانے کی اجازت نہیں دوں گی، اگست 2019 میں بھی دی ووڈ لینڈز کے 57 سالہ سٹیورٹ ہینسن کو ناز شاہ کو جارحانہ ای میلز بھیجنے پر 12 ہفتوں کے لیے جیل بھیج دیا گیا تھا جب اس نے ناز شاہ کو ایک ای میل بھیجنے کا اعتراف کیا تھا جس میں ان پر یہود دشمنی کا الزام لگایا گیا تھا۔

50% LikesVS
50% Dislikes