جس نے کتاب اللہ اور سنت نبیؐ کو سختی سے پکڑ لیا وہ کبھی بھی گمراہ نہیں ہوگا، پیرعرفان مشہدی – Kashmir Link London

جس نے کتاب اللہ اور سنت نبیؐ کو سختی سے پکڑ لیا وہ کبھی بھی گمراہ نہیں ہوگا، پیرعرفان مشہدی

بریڈفورڈ (کشمیر لنک نیوز ) کلام الٰہی کی تلاوت کرنے والے اوراس پر عمل کرنے والے ہی ہدایت پر قائم رہیں گے ، قرآن کریم کو ہدایت کی سچی طلب اورنیت کے ساتھ پڑھنا چاہئے کیونکہ اﷲ تعالیٰ کی اس کتاب کے علاوہ کامل حق کہیں اور ممکن ہی نہیں، ان خیالات کا اظہار حجۃ الاسلام پیر سید محمد عرفان شاہ مشہدی موسوی نے ڈسٹرکٹ بریڈفورڈ میں ستائیسویں شب لیلۃ القدر کی ایک محفل سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ ڈسٹرکٹ بریڈفورڈ میں ستائیسویں شب لیلۃ القدر مذہبی عقیدت اور احترام سے منائی گئی، اس موقع پر مساجد اورگھروں میں خصوصی عبادات کااہتمام کیا گیا فرزندان اسلام رات بھر مساجد میں ا ﷲ تعالیٰ کے حضور سجدہ ریز ہو کر نوافل اور قرآن پاک کی تلاوت میں مشغول رہے ،بریڈفورڈ کی اکثر مساجد میں ختم قرآن اور جشن نزول قرآن کی تقریبات کا بھی انعقاد کیا گیا۔

جامع مسجد عثمانیہ بریڈفورڈ میں جشن نزول قرآن کی تقریب مفتی علامہ محمد بشیر طاہر نقشبندی کی صدارت میں منعقد ہوئی، تقریب کے مہمان خصوصی حجۃ الاسلام پیر سید محمد عرفان شاہ مشہدی موسوی تھے۔ پیر سید محمد عرفان شاہ مشہدی موسوی نے اپنے خطاب میں کہاکہ قرآن کریم ، سنت رسولﷺ اور صحابہؓ و اہلبیتؓ کو تھامنے میں ہی ہدایت ہے جس نے بھی کتاب اللہ اور سنت نبیﷺ کو سختی سے پکڑ لیا وہ کبھی بھی گمراہ نہیں ہوگا، وہ ہدایت پر ہی رہے گا اگرکوئی قرآن کو اور نبی کی سنت کو ایک ہی جگہ ایک شخص میں دیکھنا چاہتا ہے وہ رسولﷺ کی ذات گرامی ہے،آپ ﷺ نے قرآن بھی پہنچایا اور اپنی سنت بھی سکھائی، اﷲ تعالیٰ نے قرآن کریم کو قیامت تک آنے والے انسانوں کی ہدایت کے لئے نازل فرمایا ہے، قرآن کریم سے فائدہ ﷲ سے ڈرنے والے انسان ہی اٹھاتے ہیں ۔

پیر محمد عرفان شاہ مشہدی نے کہاکہ صحابہ کرام، اہلیبیت اور والدین سے قطع تعلق کرنے والے کبھی قرآن سے ہدایت کا نور نہیں حاصل کرسکتے، سچے دل اور نیت سے ہدایت کی تلاش کرنے والوں کو قرآن پاک صراط مستقیم دکھاتا ہے اور ان کےظاہرباطن کو منور کر کے ان کے ایمان کو تقویت دیتا ہے ۔اس موقع پر علامہ محمد بشیر طاہر نقشبندی اورعلامہ ساجد شامی نے لیلۃ القدر رات کی فضیلت پر روشنی ڈالی ،رمضان المبارک میں قرآن سنانے والے حفاظ مولانا عابد حسین ، علامہ محمد علی اظہر کو مبارک باد دی گئی اور انہیں ہار پہنائے گئے بعد ازاں مساجد میں صلواۃ تسبیح ادا کی گئی، عالم اسلام اور وطن پاکستان کے استحکام کے لیے خصوصی دعائیں کی گئیں ۔

50% LikesVS
50% Dislikes