سویڈن میں مقیم پاکستانی مسیحی برادری نئے پاکستان کی تعمیر میں بھرپور کردارادا کررہی ہے: ڈاکٹر ظہور احمد – Kashmir Link London

سویڈن میں مقیم پاکستانی مسیحی برادری نئے پاکستان کی تعمیر میں بھرپور کردارادا کررہی ہے: ڈاکٹر ظہور احمد

سٹاک ہوم (کشمیر لنک نیوز) سویڈن میں پاکستانی مسیحی برادری کی ایک بڑی تعداد آباد ہے اور وہ سویڈش معاشرہ میں اپنے مثبت قردار کی وجہ سے جہاں سویڈن اور پاکستان کے درمیان ایک پل کا قردار ادا کر رہے ہیں وہاں وہ سویڈن میں پاکستانی کمیونٹی اور پاکستان کی نیک نامی کا باعث بھی ہیں۔ سویڈن کے دارالحکومت سٹاک ہوم کے علاقہ ہالندا میں پاکستانی مسیحی کمیونٹی کے قائم کردہ انڈو پاک ایکومینیا چرچ کی انتظامیہ کی دعوت پر سویڈن و فن لینڈ کے سفیر ڈاکٹر ظہور احمد نے چرچ کا دورہ کیا دورہ میں ان کیساتھ ہیڈ آف چانسری سفارت خانہ پاکستان سٹاک ہوم رزاق تھیبو ،پاکستان کمیونٹی سے سعید شیخ ،کاشف عزیز بھٹہ ،حسین ندیم بٹ،محمد توقیر،سجاد آفریدی،رانا فہد،بھی شامل تھے ۔

انڈو پاک ایکومینیا چرچ آمد پر سفیر پاکستان کو چرچ کی انتظامیہ جن میں چرچ کے صدر رابرٹ آصف،فادر بوآز کامران ،سہراب،منور ،آمون خان،و دیگر کی جانب سے خوش آمدید کہا گیا اور پھولوں کا گلدستہ پیش کیا گیا۔چرچ کے فادر بوآز کامران نے اپنے خطاب میں سفیر پاکستان کو خوش آمدید کہتے ہوئے کہا کہ وہ نہائت شکر گزار ہیں کہ سفیر پاکستان نے چرچ کا دورہ کیا اور پاکستانی مسیحی برادری سے ملاقات کی۔ انہوں نے کہا کہ پچھلے 18 سال میں یہ پہلا موقع ہے کہ کسی سفیر نے چرچ کا دورہ کیا اور پاکستانی مسیحی برادری سے ملاقات کی فادر بوآز کامران نے اسے بہت خونصلہ افزاں اقدام قرار دیا اور کہا کہ وہ چرچ کی جانب سے خدا کے گھر تشریف لانے پر زندگی کیلئے صحت کیلئے برکت کیلئے اور خدا کی اس حکمت کیلئے دعا دیتا ہوں جو آسمان سے آتی ہے اور مانگنے والوں کو ملتی ہے۔

فادر بوآز کامران نے کہا کہ ہم سب پاکستانی ہیں اور ہمارے دل پاکستان کیلئے دھڑکتے ہیں پاکستان ہمارا پیارا ملک ہے اور ہم حقیقت میں پاکستان سے پیار کرتے ہیں اور اسے خوشحال اور مستحکم دیکھنا چاہتے ہیں انہوں نے سفیر پاکستان کو چرچ کی مدد سے سویڈن اور پاکستان میں چلنے والے فلاحی اداروں کی تفصیل بھی بتائی۔سفیر پاکستان نے اپنے خطاب میں تمام مسیحی برادری اور انڈو پاک ایکومینیا چرچ کی انتظامیہ کا شکریہ ادا کیا اور کہا کہ حکومت پاکستان اقلیتوں کو ہر شعبہ میں یکساں مواقع فراہم کررہی ہے۔

اس موقع پرسفیر پاکستان کا کہنا تھا کہ نئے پاکستان کی تعمیر میں مسیحی برادری بھرپور کردارادا کررہی ہے۔وطن عزیز کے پرچم میں سفید رنگ اقلیتوں کی ترجمانی کرتا ہے، پاکستان میں اقلیتوں کو تحفظ حاصل ہے، مسیحی بھائیوں کی ترقی کیساتھ ملکی دفاع میں بھی قابلِ قدر خدمات ہیں۔ مسیحی برادری کی خدمات کو کبھی بھی فراموش نہیں کیاجاسکتا، نئے پاکستان میں تمام اقلیتی نمائندوں کوساتھ لیکر چل رہےہیں۔سفیر پاکستان نے کہا کہ ہم مذہبی ہم آہنگی اور رواداری کے لیے کام کر رہے ہیں۔ ہم سمجھتے ہیں کہ پاکستان سب کا ملک ہے اور اس میں بسنے والے تمام لوگ بلا امتیاز مذہب، رنگ و نسل پاکستان کے شہری ہیں۔سفیر پاکستان ڈاکٹر ظہور احمد نے سویڈن میں پاکستانی مسیحی کمیونٹی کے کلیدی کردار کو سراہتے ہوئے ان کے پاکستان اور سویڈن کے درمیان پل کے کردار پر تعریف کی اور کہا کہ ہم کو آپ پر فخر ہے۔

سفیر پاکستان نے گزشتہ ہفتہ سویڈن کے دوسرے بڑے شہر گوتھن برگ میں واقع سیمرون چرچ کے دورہ کا بھی زکر کیا انہوں نے کہا کہ وہاں ان کو پاکستان میں 40 سال نرسنگ اور تعلیم کے شعبہ میں کام کرنے والی سویڈش نرس وینی لیکردال سے ملاقات کر کہ بہت خوشی ہوئی وینی لیکروال جنہوں نے 40 سال تک ٹیکسلا اور ساہیوال میں بغیر کسی مزہب اور رنگ ونسل کی تفریق کے دُکھی انسانیت کی خدمت کی اور ان کی خدمت کے اعتراف میں خکومت پاکستان کی جانب سے ان کو صدارتی ایوارڈ سے نوازا گیا۔ سفیر پاکستان نے اپنے خطاب کے اہتمام میں انڈو پاک ایکومینیا چرچ کی انتظامیہ اور تمام مسیحی برادری کا شکریہ ادا کیا اور ان کو سفارت خانہ پاکستان سٹاک ہوم کی جانب سے ہر ممکنہ مدد کی یقین دہانی کروائی۔فادر بوآز کامران نے تقریب کے آخر میں دعا کروائی اور کہا کہ ہماری دعا ہے کہ خدا تعالیٰ وطن عزیز کو ہمیشہ سلامت رکھے، پاکستان امن و انصاف کا گہوارہ بن جائے اور اس میں بسنے والے تمام لوگ خوشحال ہوجائیں۔

50% LikesVS
50% Dislikes