جموں کشمیر لبریشن فرنٹ برطانیہ زون کے گروپ کی ورکنگ اور ایگزیکٹو کمیٹی کا مشترکہ اجلاس – Kashmir Link London

جموں کشمیر لبریشن فرنٹ برطانیہ زون کے گروپ کی ورکنگ اور ایگزیکٹو کمیٹی کا مشترکہ اجلاس

لوٹن (کشمیر لنک نیوز) جموں کشمیر لبریشن فرنٹ برطانیہ زون کے ایک گروپ جس کے صدر لوٹن سے تعلق رکھنے والے سید تحسین گیلانی ہیں، کی ورکنگ اور ایگزیکٹو کمیٹی کا ایک مشترکہ اجلاس منعقد ہوا جس میں لوٹن سے اس گروپ کے صدر راجہ کمان افسر بھی شریک ہوئے۔ اجلاس کی صدارت برطانیہ زون کے صدر تحسین گیلانی اور نظامت کے فرائض عبوری جنرل سیکرٹری ممتاز مرزا نے ادا کئے ۔

اجلاس کا آغاز شعیب ساغر جنجوعہ کی تلاوت کلام پاک سے ہوا۔ اس موقع پر ریاست جموں کشمیر کی جبری تقسیم کو ہر اعتبار سے ناقابل قبول قرار دیا گیا اور واضح کیا گیا کہ کشمیر کی ریاست کے حصے بخرے کرنے اور وحدت کو پارہ پارہ کرنے کے تمام فارمولوں، سازشوں اور کوششوں کی ہر سطح پر مزمت کی جائے گی اور تقسیم کشمیر کے خلاف جمہوری طور پر عالمی فورمز پر آواز بلند کی جاتی رہے گی۔ رہنماؤں نے کہا کہ ہمیں ‎کسی صورت میں کشمیر کی تقسیم قابل قبول نہیں، جموں و کشمیر کے عوام ایسے کسی فارمولے کو تسلیم نہیں کرتے بلکہ ایسے کسی بھی فیصلہ کے خلاف اندرون ریاست اور بیرون ممالک میں بھرپور سیاسی اور سفارتی سطع پر مزاحمت کی جائے گی۔ بھارتی حکومت کی طرف سے چیئرمین یاسین ملک پر بے بنیاد اور جھوٹے کیسز بنا کر آزادی اور خودمختاری کی آواز کو ختم کرنے کے منصوبوں کو بھی کبھی کامیاب نہیں ہونے دیں گے۔ یاسین ملک کی رہائی کے لئے برطانیہ، یورپ اور امریکہ کے اندر سفارتی جدوجہد تیز کرنے کا فیصلے کرتے ہیں۔

اس موقع پر آزادکشمیر، گلگت بلتستان زون کے تاریخ ساز کنونشن منعقد کروانے پر اور نئے منتخب ہونے والی تمام قیادت کو مبارک باد دینے کے ساتھ ساتھ ان پر مکمل اعتماد اور ان کے ساتھ پورا تعاون کرنے کا فیصلہ بھی کیا گیا اور کہا کہ ہماری جدوجہد ریاست کی وحدت کی مکمل بحالی اور خود مختاری تک جاری رہے گی۔ انہوں نے مزید کہا کہ ہمیں برطانیہ زون کے صدر تحسین گیلانی سمیت پوری قیادت پر مکمل اعتماد ہے۔ شرکاء اجلاس نے کہا کہ ریاست جموں و کشمیر ایک ناقابل تقسیم وحدت ہے۔ اس کی تقسیم کے لئے ہونے والی ہر سازش کا مقابلہ کریں گے۔ ریاست جموں و کشمیر دو ملکوں کے درمیان کوئی سرحدی تنازع نہیں بلکہ سوا دو کروڑ کشمیری عوام کے حق خودارادیت کا معاملہ ہے۔

اس موقع پر ریاست کے مختلف حصوں کو صوبہ بنانے کی باتوں کی بھی مذمت کی گئی اور کہا کہ اس طرح کے کسی منصوبے کو کسی صورت پایہ تکمیل پر نہیں پہنچنے دیں گے۔ شرکاء اجلاس نے مزید کہا کہ اب وقت آ پہنچا ہے کہ ہم اپنی صفوں کے اندر اتحاد پیدا کرتے ہوئے آزادی کشمیر کے لئے کام کو آگے بڑھائیں۔ انہوں نے کہا کہ ظلم و جبر سے کسی بھی قوم کو وقتی طور پر تو دبایا جا سکتا ہے، انہیں ان کی مرضی کے خلاف مستقل طور پر غلام نہیں رکھا جا سکتا۔ اس موقع پر فرنٹ کے اس دیرینہ موقف کا اعادہ کیا گیا کہ ایشیا کے امن کا راستہ ایک آزاد و خود مختار ریاست جموں کشمیر سے ہی ہو کر جاتا ہے۔ اجلاس میں پارٹی پر بھارت کی طرف سے پابندی اور چیئرمین یاسین ملک کی رہائی کے لئے اپنی سیاسی اور سفارتی سرگرمیوں کو برطانیہ سمیت بین الاقوامی سطح پر مذید تیز کرنے کے لئے بہت جلد دوسرے زون سے مل کر لائحہ عمل تیار کرنے کا فیصلہ بھی کیا گیا۔ شرکاء اجلاس نے بھارتی حکومت سے مطالبہ کیا کہ وہ جموں و کشمیر لبریشن فرنٹ کے چیئرمین یاسین ملک کو فوری رہا کرے۔

یاسین ملک کا جرم صرف اپنے وطن کی آزادی و خود مختاری کے لئے جدوجہد کرنا ہے، لبریشن فرنٹ برطانیہ زون ان کی رہائی کے لئے قانونی اور سفارتی سطح پر موثر مہم آغاز کرے گا۔ اجلاس میں جموں و کشمیر لبریشن فرنٹ رہنما بطل حریت صابر انصاری اور دیگر مرحومین کی جدوجہد کو خراج عقیدت پیش کرتے ہوئے کھڑے ہو کر ایک منٹ کی خاموشی اختیار کی گئی اور تمام مرحومین کے لئے دعائے مغفرت کی گئی۔ جموں و کشمیر لبریشن فرنٹ برطانیہ زون کے اس گروپ کے صدر تحسین گیلانی کی قیادت پر بھرپور اعتماد کرتے ہوئے اجلاس میں خالی عہدوں پر انتخاب ہوئے، جس میں جنرل سیکرٹری شکیل جرال بولٹن، سیکرٹری اطلاعات احسان انصاری برمنگھم، ڈپٹی جنرل سیکرٹری افتخار کلیال سلاؤ، نائب صدر شبیر کشمیری اولڈ ہم، فنانس سیکرٹری ادریس شاہد سٹوک آن ٹرنٹ منتخب ہوئے، اس کے علاوہ ایکزیکٹیو کمیٹی کے ممبران کو بھی منتخب کیا گیا، جس میں محمد معصوم انصاری برمنگھم، ساجد حسین سٹوک آن ٹرنٹ، محمد صغیر بریڈ فورڈ اور الیکشن کمشنر محمد ناظم بھٹی برمنگھم کو چنا گیا۔

50% LikesVS
50% Dislikes