پاکستان کی بقا اس کے اداروں کے مضبوطی میں ہے؛ برسلز میں استحکام پاکستان کانفرنس – Kashmir Link London

پاکستان کی بقا اس کے اداروں کے مضبوطی میں ہے؛ برسلز میں استحکام پاکستان کانفرنس

برسلز (کشمیر لنک نیوز) اوورسیز میں وطن عزیز سے محبت اور الفت کے اظہار کیلئے استحکام پاکستان سیریز کے سلسلے میں برطانیہ اور یورپ میں تقریبات کا سلسلہ جاری ہے، بیلجئم کے دارالحکومت برسلز میں پاکستان یونٹی فورم کے زیر اہتمام ایک کانفرنس ہوئی جسکا انعقاد مقامی کونسلر ناصر چوہدری اور کمیونٹی رہنما سردار صدیق خان کی جانب سے کیا گیا جس میں کمیونٹی کی کثیر تعداد نے شرکت کی۔
استحکام پاکستان کانفرنس کے مقررین کا کہنا تھا کہ پاکستان کی بقا اس کے اداروں کے استحکام میں ہے۔ پاکستان نے ہمیں شناخت سمیت سب کچھ دیا ہے، اب یہ ہماری ذمہ داری ہے کہ ہم بھی اپنے وطن کو کچھ واپس لوٹائیں۔ ڈاکٹر علی شیرازی نے کہا کہ لیڈر شپ ، ادارے اور ریاست ایک ایسی مثلث ہے جس کی یکجہتی سے ملک کی بقا جڑی ہوئی ہوتی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ تین مختلف جنگوں نے ہمیں اتنا نقصان نہیں پہنچایا جتنا آجکل ہماری اندرونی تقسیم ہمیں پہنچا رہی ہے۔

کونسلر ناصر چوہدری نے اپنے خیالات کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ برسلز میں 195 قومیتیں آباد ہیں لیکن الحمد للہ پاکستانی کمیونٹی اپنی ایک شناخت رکھتی ہے۔ مختلف فلاحی کاموں کے نتیجے میں اسے ایک انسان دوست کمیونٹی تصور کیا جاتا ہے ۔ انہوں نے متوجہ کیا کہ ہمیں اپنے وطن کے عزت میں اضافے کیلئے اپنے اندر مزید سماجی ڈائیورسٹی لانے کی ضرورت ہے۔ طالبعلم رہنما زروان غامدی نے کہا پاکستان میں آج جو بھی خوشحالی ہے وہ اس امن کی بدولت ہے جو ہمارے اداروں کی قربانیوں سے حاصل کیا گیا ہے۔
چوہدری پرویز لوہسر نے تقریب سے خطاب کرتے ہوئے انتہائی جذباتی انداز میں افواج پاکستان کے ساتھ اپنی وابستگی کا اظہار کیا۔ انہوں نے کہاکہ افواج پاکستان کی موجودگی استحکام پاکستان کی نشانی ہے۔ جب تک افواج پاکستان موجود ہیں، اس ملک کو کوئی نقصان نہیں پہنچا سکتا۔ انہوں نے کہا کہ افواج پاکستان کا سپہ سالار کوئی بھی ہو ہمارے لیے یہ اہم ہے کہ ہم اس کی عزت کریں۔

سردار صدیق خان نے کہا کہ کوئی بد بخت ہی ہوگا جو پاکستان کے اداروں کو نقصان پہنچانا چاہے گا۔ انہوں نے متوجہ کیا کہ پاکستان کی سیاسی جماعتیں بھی ادارے ہیں انہیں بھی کمزور نہیں ہونا چاہیے۔ وطن کی ترقی اور استحکام پاکستان کا واحد طریقہ یہی ہے کہ تمام ادارے طاقتور رہیں۔ کانفرنس کا آغاز حافظ و قاری انصر نورانی کی تلاوت سےہوا، تقریب کے پہلے حصے کی میزبانی پریس کلب بلجیم کے صدر چوہدری عمران ثاقب اور دوسرے حصے کی میزبانی ڈاکٹر علی شیرازی نے کی۔
کانفرنس کے شرکا میں پیپلز پارٹی بلجیم کے رہنما حاجی وسیم، ملک اجمل ، ملک اخلاق، سید شکیل حیدر، کشمیر پیس فورم کے چوہدری نصیر اور پرویز ملک، سفارت خانہ پاکستان سے نوید انجم اور قونصلر سہیل احمد نمایاں تھے۔ قبل ازیں تقریب کے آغاز میں پاکستان کا قومی ترانہ بجایا گیا جسے تمام حاضرین نے ملکر پڑھا۔

50% LikesVS
50% Dislikes