سات دہائیاں گذرنے کے باوجود کشمیریوں کو انکا حق خودارادیت نہ ملنا افسوسناک ہے؛ سیمینار تحریک کشمیر – Kashmir Link London

سات دہائیاں گذرنے کے باوجود کشمیریوں کو انکا حق خودارادیت نہ ملنا افسوسناک ہے؛ سیمینار تحریک کشمیر

کوپن ہیگن (راجہ لیاقت حسین) تحریک کشمیر ڈنمارک یورپ کے زیر اہتمام یوم حق خود اردیت کے حوالے ایک آن لائن کانفرنس کا انعقاد کیا گیا۔ جس کے مہمان خصوصی ڈنمارک میں پاکسا ن کے سفیر احمد فاروق تھے اس موقع پر سفیر پاکستان کا کہنا تھا ہر روز کشمیریوں کی بنیادی انسانی عزت پامال ہو رہی ہے، جموں وکشمیر میں بدترین مصائب، ظلم جبر و استبداد کا سامنا ہے، افسوسناک امر یہ ہے کہ کشمیریوں کا ان کاحق اب تک نہیں مل سکا جس کا وعدہ عالمی برادری نے کیا تھا۔ لیکن پاکستان ہر فورم پر ان کے لیے آواز بلند کرے گا کشمیر ہماری شہہ رگ ہے۔

تحریک کشمیر ڈنمارک کے صدر عدیل آسی نے کہا کہ آج کا دن منانے کا مقصد عالمی برادری کو 5 جنوری 1949 کو اقوام متحدہ کی منظور کی گئی اس قرارداد کی یاد دہانی کرانا ہے جس میں کشمیری عوام سے رائے شماری کے آزادانہ انعقاد شامل ہے۔

تحریک کشمیر یورپ کے صدر محمد غالب نے اس موقع پر کہا ہم یورب کے ہر ملک میں ہر وقت کشمیروں کے لیے آواز بلند کریں گے بھارت اپنی ہٹ دھرمی سے اب باز آجائے ۔ اور کشمیروں سے کیے گئے وعدوں کی پاسداری کرے ۔

مقبوضہ کشمیر سے تعلق رکھنے والے ظفر قریشی جو کہ کشمری کیمپین گلوبل کے صدر بھی ہیں انہوں نے کہا کہ مقبوضہ کشمیر پر بھارتی قبضے کو دہائیں بیت گئیں ہیں، تاہم کشمیریوں پر ظلم و جبر کا سلسلہ تھمنے کی بجائے اور تیز ہوگیا ہے۔ سیکڑوں شہادتوں، پیلٹ گنوں سے معذوری اور خواتین کی عصمت دری کے واقعات کے باوجود کشمیریوں کا جذبہ آزادی اور جنون پکڑ رہا ہے۔ کشمیریوں کا بڑا مطالبہ بھارتی تسلط سے آزادی اور حق خودارادیت ہے۔

ڈاکٹر ہما خان نے کشمیر میں خواتین کے حقوق کی پامالی اور عصمت دری کےحوالے سے ایک پریزینٹیشن پیش کی۔
تحریک کشمیر ڈنمارک کے سر پر ست میاں منیر احمد نے کہا کہ مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فوج نے حق خود ارادیت کا مطالبہ کرنے والے پر امن لوگوں کو کچلنے کے لیے خواتین بچوں سمیت ہزاروں افراد کو شہید کیا گیا ہے۔ ہم اس کی پر زور مذمت کرتے ہیں۔

کانفرنس سے اٹلی سے محمود شریف اور ناروے سے میاں طیب نے بھی خطاب کیا جبکہ برطانیہ ،یورپ اور ڈنمارک سے تحریک کشمیر کے ممبران نے شرکت کی ۔ کانفرنس کی نظامت تحریک کشمیر ڈنمارک کے جنرل سیکرٹری اشفاق ابدالی نے کی ۔
آخر میں صدر تحریک کشمیر ڈنمارک عدیل آسی تمام شرکا کا شکریہ ادا کیا اور دعا کے ساتھ کانفرنس کا اختتام کیا۔

50% LikesVS
50% Dislikes