معروف کشمیری رہنما راجہ نجابت کو ملنے والا ستارہ پاکستان پوری کمیونٹی کا اعزاز ہے؛ راجہ سجاول

اولڈہم (محمد فیاض بشیر) اگر لگن سچی ہو اپنے مقصد کے حصول کو پانے کا جذبہ ہو ،نیت صاف ہو اور تنقید برائے تنقید برداشت کرنے کے ساتھ استقامت کا راستہ اختیار کیا ہو تو اللہ تعالیٰ ضرور صلہ دیتا ہے تحریک آزادی کشمیر کو عالمی سطح پر موثر انداز سے اجاگر کرنے کے دعوے دار تو لاتعداد ہیں جو وسائل کو بروئے کار لا کر یہ کام سر انجام دیتے ہیں لیکن محدود وسائل ہونے کے باوجود تحریک آزادی کشمیر کو عالمی سطح پر اجاگر کرنے میں ایک عام تحریک کے کارکن جموں کشمیر تحریک حق خود ارادیت انٹرنیشل کے بانی و چئیرمن راجہ نجابت حسین نے گذشتہ کئ برسوں سے مقبوضہ کشمیر میں بھارتی جارحیت ظلم وبربریت اور انسانی حقوق کی کھلم کھلا خلاف ورزیوں کو تمام متعلقہ فورم پر اٹھانے کوئی دقیقہ فروگزاشت نہیں کیا بلا آخر حکام بالا کو انکے کام کا معترف ہونا پڑا۔ صدر پاکستان کی جانب سے چئیرمن تحریک حق خود ارادیت انٹرنیشل کے بانی و چئیرمن راجہ نجابت حسین کو جشن آزادی پاکستان کے دن تحریک آزادی کشمیر اور مقبوضہ کشمیر میں بھارتی جارحیت بارے عالمی سطح پر آگاہی دینے کے صلہ میں سے سول ایوارڈ ستارہ پاکستان سے نوازا گیا جو ایک احسن اقدام اور دانشمندانہ فیصلہ ہے ہم اسکا دلی خیر مقدم کرتے ہیں ۔ ان فرط جذبات کا اظہار بین الاقوامی سماجی و کمیونٹی شخصیت راجہ سجاول حسین نے میڈیا کو دے گئے خصوصی بیان میں کیا ۔ انکا کہنا تھا کہ درحقیقت تحریک آزادی کشمیر بارے محدود وسائل کے باوجود جتنا موثر انداز میں راجہ نجابت حسین نے کام کیا ہے کسی دوسرے کے حصے میں نہیں آیا ۔ انہوں نے راجہ نجابت حسین کو دلی مبارکباد پیش کرتے ہوئے کہا کہ انہیں راجہ نجابت حسین کی شخصیت پر مکمل اعتماد ہے کہ وہ کشمیر کی آزادی کے لیے آگے سے بڑھ کر مزید جوش و جذبہ سے کام کریں گے ہم انکی مدد کے لیے ہراول دستے کا کردار ادا کرنے کے لیے تیار بیٹھے ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں