میاں نواز شریف کی قیادت کی قوم کو بھی ضرورت ہے اور پارٹی کو بھی؛ خواجہ آصف – Kashmir Link London

میاں نواز شریف کی قیادت کی قوم کو بھی ضرورت ہے اور پارٹی کو بھی؛ خواجہ آصف

لندن (اکرم عابد) لندن میں موجود پاکستانی وزیر دفاع اوع مسلم لیگ ن کے سینیئر رہنما خواجہ آصف نے کہا ہے کہ ہمارے پاس اقتدار رہے یا نا رہے ہم پاکستان کی بہتری چاہتے ہیں، برطانوی دارالحکومت میں میڈیا نمائندگان سے بات چیت میں انکا کہنا تھا معاشی حالات کی درستگی ہماری پہلی ترجیح ہے، ہمیں جلدی فیصلے کرنے ہوں گے کیونکہ مارکیٹس میں منفی رجحانات نمایاں نظر آ رہے ہیں، چاہتے ہیں معاشی حالات درست ہوں، اگلے مرحلے میں الیکشن کرائیں گے۔

خواجہ آصف کا کہنا تھا کہ پی ٹی آئی نے وہی کرنا ہے جو 2013 میں کیا تھا، کسی پی ٹی آئی رکن نے استعفیٰ نہیں دینا، پی ٹی آئی اراکین تنخواہیں لے رہے ہیں، ان لوگوں نے ابھی تک گاڑیاں بھی واپس نہیں کیں۔ ان کا کہنا تھا کہ یہ دھرنے سے بھی معافیاں مانگ رہے ہیں، یہ کہہ رہے ہیں ہمارے ساتھ رابطے ہو رہے ہیں، یہ خود رابطے کر رہے ہیں کہ ہمیں بچاؤ، جب 14 مہینے رہ گئے ہوں تو ہر الیکشن اگلا الیکشن ہے۔

وزیر دفاع کا کہنا تھا ہم عمران خان کی طرح کا رویہ اختیار نہیں کریں گے، پریشر آیا تو ہمارے پاس ایلچی بھیج دیے کہ اسمبلی تحلیل کرتا ہوں استعفے نہ دیں، دھرنا نہ دیں، اب اس قسم کی کوئی بات نہیں ہو گی، جو بات ہو گی آئین و قانون کے مطابق بات ہو گی، حتمی طاقت عوام ہیں، مینڈیٹ کی ضرورت پڑی تو عوام کے پاس جائیں گے، دیکھیں گے اگر حالات ایسے ہیں کہ 5 سال پورے ہونے چاہئیں تو مقررہ وقت میں الیکشن کرائیں گے۔

انہوں نے کہا کہ عمران خان نیوٹریلٹی کی مخالفت کرتے ہیں، ان کا ہر چیز کو ناپنے کا پیمانہ یہ ہے کہ لوگ، ادارے ان کی ذات سے وفاداری کا اعلان کریں، وفاداری افراد سے نہیں ہوتی، افراد آج ہیں کل نہیں ہیں، وطن، ریاست اور آئین دوام ہے، ان کےساتھ وفاداری ہونی چاہیے۔ایک سوال کے جواب میں خواجہ آصف کا کہنا تھا میرا تو دل کرے گا کہ کل ہی نواز شریف کو لے کر چلا جاؤں لیکن یہ پارٹی فیصلہ کرے گی، میاں صاحب آئیں گے تو سیاسی ماحول کا ٹمپریچر اوپر جائے گا، میاں صاحب کی قیادت کی قوم کو بھی ضرورت ہے اور پارٹی کو بھی۔

50% LikesVS
50% Dislikes