پاکستان کمیونٹی فورم کے تحت عشق لاہوتی کی تقریب پذیرائی اور محفل مشاعرہ کا انعقاد – Kashmir Link London

پاکستان کمیونٹی فورم کے تحت عشق لاہوتی کی تقریب پذیرائی اور محفل مشاعرہ کا انعقاد

لندن (کشمیر لنک نیوز) برطانیہ میں مقیم سیدہ کوثر کے پہلے مجموعہ کلام عشق لاہوتی کی تقریب رونمائی لندن میں چودہ برسوں سے ادبی و سماجی پروگرامز ترتیب دینے والی تنظیم والتھم فارسٹ پاکستان کمیونٹی فورم کے تحت والتھم کے علاقہ لیبریج لائیبریری میں منعقد ہوئی تقریب میں لندن سے اپنے اپنے شعبہ کی نمایاں شخصیات نے بھرپور شرکت کی اس موقع پہ سیدہ کوثر کے پہلے مجموعہ کلام “عشقِ لاہوتی “ کو خوشنما پیکنگ سے باقاعدہ تحفہ کے صورت کھول کر رونمائی کی گئی۔ قیادت مستند شاعر امجد مرزا امجد نے کی۔

“عشق لاہوتی” سیدہ کوثر کی غزلیات پہ مبنی شعری مجموعہ ہے جو اخیر 2021 میں پبلش ہوا اور محض تین ماہ کی قلیل مدت میں آؤٹ آف سیل ہو چکا ہے۔ اس کا دوسرا آڈیشن جلد ہی پرنٹ ہوکر مارکیٹ میں دستیاب ہوگا۔ “عشقِ لاہوتی “کی تقریب رونمائی میں لندن کے تمام شعبہ ہائے زندگی سے تعلق رکھنے والی معتبر شخصیات نے شرکت کی ۔ معروف شخصیات نے سیدہ کوثر کی شاعری اور شخصیت پہ مفصل مضامین پڑھے.

ان شخصیات میں راجہ اجمل۔ نعتیہ شاعر ٹیپو ارسل جیو ٹی وی نمائیدہ مشتاق ودود ۔ شاعر امجد مرزا امجد اور فرزانہ فرحت کے ساتھ ساتھ دوسرے بہت سے ادبا نے ان کی کتاب کلام اور ان کی شخصیت پر اپنے اپنے خیالات کا اظہار کیا۔جس کے بعد شاعرہ نے اپنے بارے میں اور شاعری کے بارے میں بڑی تفصیل سے ذکر کیا حاضرین نے ان سے سوالات بھی کیے جن کا انہوں نے بزلہ سنجی کے ساتھ علمی و عقلی جوابات سے محفل کو گرمایا اور اپنے نہایت خوبصورت اشعار اور غزلیات سے محفل کو چار چاند لگائے ۔ اس کے بعد ایک رسمی مشاعرے کی محفل کا انعقاد بھی کیا گیا۔ جس کی ابتدا امجد مرزا امجد نے ترنم سے محترمہ سیدہ کوثر کی ایک نہایت خوبصورت غزل کو پیش کیا کہ ہال تالیوں سے گونج اُٹھا۔۔ اس یادگار خوبصورت محفل کتابِ رونمائی کی صدارت تنظیم کے صدر ڈاکٹر رشید اختر نے اور ادبی محفل کی صدارت معروف شاعرہ ڈاکٹر فرزانہ فرحت نے کی جبکہ مہمان خصوصی محترمہ سیدہ کوثر اور مہمان اعزازی معروف شاعر پروفیسر عبدالقدیر کو کب تھے۔

اس تقریب رونمائی کی سب سے خاص بات یہ رہی روایتی طریقہ کار سے ہٹ کر۔ ایک مخصوص بیانیہ تقریر کی بجائے سیدہ کوثر کے ساتھ سوال و جواب کی محفل رکھی گئی ، گفتگو کے دوران سیدہ کوثر کا کہنا تھا کہ شاعری عطاء خاص ہے جو حساس اور نرم طبیعتوں پہ وارد ہوتی ہے اور شاعر کے نازک مزاج پہ معاشرے کے اسلوب کی بھاری زمہ داری عائد ہوتی ہے۔ پروگرام کی ابتدا میں مہمانوں کی ضیافت کے لئے مرغ بریانی ، سموسے ،کیک ، چائے اور مختلف قسم کے مشروبات تھے

50% LikesVS
50% Dislikes