نگینہ جامع مسجد اولڈہم میں نماز عید کی ادائیگی، غزہ القدس اور فلسطین کے مظلوموں کی خصوصی دعائیں – Kashmir Link London

نگینہ جامع مسجد اولڈہم میں نماز عید کی ادائیگی، غزہ القدس اور فلسطین کے مظلوموں کی خصوصی دعائیں

اولڈہم (محمد فیاض بشیر)عید الفطر کے پر مسرت موقع پر نگینہ جامع مسجد اولڈہم میں نماز عید کی ادائیگی کا خصوصی اہتمام کیا گیا۔ مسجد کے امام مولانا قاری خادم حسین چشتی نے اس موقع پر خطبہ دیتے ہوئے کہا کہ عید دراصل گناہوں کو چھوڑنے اور رب کو راضی کرنے کا نام ہے رب فرماتا ہے جب روزے مکمل کر چکو تو اللہ کی تکبیر بیان کروتاکہ تم ہدایات پر آکر شکر گزار بندے بن سکو۔
انہوں نے امت مسلمہ سے عیدالفطر انتہائی سادگی سے منانے کی استدعا کی کہ غزہ القدس اور فلسطین کے غریبوں کی مدد کے لیے انکو عیدی بھیجیں تاکہ حقیقت میں آپکی بھی عید ہو اور انکی بھی ہو جائے ۔ امت مسلمہ کے اتحاد و اتفاق بالخصوص فلسطین کے مظلوم عوام پر اسرائیلی فوج کی ظالمانہ کاروائیوں اور مسجد اقصیٰ کے بے حرمتی کے خلاف بھرپور احتجاج کرتے ہوئے اقوام متحدہ اور عالم اسلام سے درخواست کی کہ اسرائیل کا فلسطینیوں پر ظلم و ستم بند کروایا جائے مقبوضہ کشمیر کے مسلمانوں پر بھارتی جارحیت بند کروا کے کشمیری قوم کو آزادی دی جائے۔

نماز عید کے بعد مختلف کمیونٹی رہنمائوں نے میڈیا سے بات چیت میں فلسطین پر اسرائیلی مظالم پر شدید احتجاج کیا، وزیراعظم آزاد کشمیر کے برطانیہ میں کوآرڈینیٹر راجہ مقصود حسین کاکڑوی کا کہنا تھا دعائے رب العالمین ہے کہ فلسطین کشمیر کے مظلوم مسلمانوں کی مدد فرمائے اور ہم عہد کرتے ہیں عیدالفطر کے موقع پر ہم فلسطین کے غربا کی ہر ممکن مدد کریں گے ۔مولانا فرخ کا کہنا تھا کہ رب کریم کے شکر گزار ہیں کہ لمبے عرصے بعد ہمیں مسجد میں عید الفطر ادا کرنے کا موقع ملا مسجد کی انتظامیہ نے نماز کی ادائیگی کے لیے خاطر خواہ انتظامات کیے دعاگو ہیں کہ رب العالمین فلسطین اور کشمیر کے مسلمانوں کو عیدالفطر خوشی کے ساتھ منانے کی توفیق دے اور انہیں جلد آزادی کی نعمت ملے ۔ حافظ جاوید اقبال ، راجہ صغیر کاکڑوی اور راجہ عرفان سمیت دیگر کا کہنا تھا کہ کورونا وائرس کی وجہ سے لگی پابندیوں کے بعد پہلی مرتبہ عید باجماعت ادا کی گئ انتہائی خوشی ہے سب کو عید الفطر کی مبارکباد ہم عیدالفطر کے موقع پر کشمیر اور فلسطین کے مسلمانوں سے دلی اظہار یک جہتی کا اظہار کرتے ہیں اقوام متحدہ سے مطالبہ ہے کہ وہ کشمیر اور فلسطین کے مسئلہ کو حل کروائے۔

50% LikesVS
50% Dislikes