جو محبت اور خلوص صحافی برداری سے ملا قابل ستائش ہے: مئیر محمد زمان – Kashmir Link London

جو محبت اور خلوص صحافی برداری سے ملا قابل ستائش ہے: مئیر محمد زمان

راچڈیل (محمد فیاض بشیر)صحافت ایک مقدس پیشہ ہے جو ایک صحت مند معاشرے کا آئینہ دار ہوتا ہے قوموں کی ترقی صحافت کا کردار بنیادی اہمیت کا حامل ہے اور یہ قوم ملک اور کمیونٹی کے لیے قیمتی سرمایہ ہیں ۔عوام کو اس کی اہمیت کو سمجھنا اور صحافیوں کو ذمہ داری کا احساس ہونا لازمی ہے۔ ان خیالات کا اظہار راچڈیل کونسل کے مئیر محمد زمان نے مقامی صحافیوں اور میڈیا انڈسٹری سے تعلق رکھنے والے نمایاں افراد کا مقامی ریسٹورنٹ میں رکھی گئی ایک افطار پارٹی کے موقع پر کیا ۔ان کا مذید کہنا تھا کہ صحافیوں نے جس طرح راچڈیل کو مثبت اور تعمیری انداز میں الیکٹرانک، پرنٹ اور سوشل میڈیا میں پیش کرنے،اس کے مسائیل کے حل اور اس کی خوبیوں اور راچڈیل کی عوام کو خوبصورت انداز میں دکھایا اس پر شکریہ ادا کرتا ہوں میڈیا کی وجہ سے ہی راچڈیل کا مثبت تشخص دنیا تک پہنچا ہے ۔ ان کا کہنا تھا کہ عہدے سدا پاس نہیں رہتے لیکن جو محبت خلوص ایک سال کے عرصہ کے دوران صحافی برداری سے ملا قابل ستائش ہے جو میرے لیے سرمایہ حیات ہے کبھی بھی فراموش نہیں کر سکتا۔ جب کہ صحافیوں نے بھی مئیر راچڈیل کونسلر محمد زمان اور ان کی ٹیم جن میں میڈیا کو آرڈینیٹر چوہدری خالد، سیکرٹری ناظم سلمان اور رچرڈ کو ان کی ان تھک محنت اور شاندار خدمات پر خراج تحسین پیش کیا ۔صحافیوں کے اعلی کردار کو سراہتے ہوئے ان کو تعریفی اسناد اور یادگاری شیلڈ پیش کیں۔ چوہدری اسحاق، سید فرحت کاظمی، چوہدری وسیم، چوہدری عارف پندھیر،محمد نعیم چوہان، محبوب الہی بٹ، ہارون مرز،راجہ واجد، مسعود بخاری، چوہدری خالد، ،محمد شہباز، اعتزاز احسن، فیاض بشیر، غلام حسین، اور رضوان نے مئیر راچڈیل کونسلر محمد زمان اور کونسورٹ محمد شیراز کے ہاتھوں سے اپنے اعزازات وصول کیے۔نمایاں کارکردگی اور متحرک ترین صحافیوں چودھری عارف علی پندھیر -سید فرحت عباس کاظمی، چوہدری اسحاق – ےہارون مرزا،راجہ واجد، چوہدری خالد اور فیاض بشیر کو مئیر محمد زمان نے راچڈیل کے سرکاری بیچ بھی پہنائے اور تمام حاظرین نے تالیوں کی گونج میں ان کو داد پیش کی۔ برطانیہ کی تاریخ میں یہ خوبصورت تقریب بہترین انتظام،اعلی نظم و ضبط اور خوش اسلوب کے باعث اپنا ایک نمایاں مقام رکھے گی۔افطاری کے بعد باجماعت نماز مغرب ادا کی گئی اور روایتی ایشیائی کھانوں سے مہمانوں کی تواضع کی گئی۔

50% LikesVS
50% Dislikes