پاکستانی ثقافت اجاگر کرنے پر شہزادی سلطان کو ہراساں کیا جانا ایک قابل مذمت اقدام ہے: مقصود کاکڑوی – Kashmir Link London

پاکستانی ثقافت اجاگر کرنے پر شہزادی سلطان کو ہراساں کیا جانا ایک قابل مذمت اقدام ہے: مقصود کاکڑوی

مانچسٹر (محمد فیاض بشیر) برطانوی نژاد پاکستانی نوجوان گلوکارہ و سماجی شخصیت شہزادی سلطان جو کے پاکستان میں یتیم نادار غریب بچوں کے لیے عبدل عزیز پروجیکٹ کے نام سے خیراتی کام کر رہی ہیں اور گلوکاری سے ہونے والی آمدن اس منصوبے پر خرچ کرتی ہیں انہوں نے نجی کمپنی سے گانوں کی ریلیز کا معاہدہ کیا اسکے بعد سماجی رابطوں پر امریکن نژاد بھارتی شہری جو کے اس سے پہلے بے شمار پاکستانی گلوکاروں کو ہراساں کر رہی ہے نے شہزادی سلطان کے خلاف بھی منفی پروپیگنڈاہ شروع کر دیا ہے۔

اس سلسلے میں میڈیا سے بات کرتے ہوئے شہزادی سلطان کا کہنا تھا کہ میں پاکستان کی تقافت کو اجاگر کرنے اور یتیم بچوں کی کفالت کے لیے کام کر رہی ہوں کچھ عرصہ سے مجھے سماجی رابطوں پر سخت تنقید کا نشانہ بنایا جا رہا ہے جسکی وجہ سے میں سخت ذہنی دباؤ کا شکار ہوں اس بارے برطانیہ اور امریکہ میں پولیس تحقیقات کر رہی ہے۔ان کا کہنا تھا میری ان لوگوں سے گزارش ہے کہ مجھ پر الزامات لگانا بند کر دیں اور مجھے یتیم بچوں کی کفالت کرنے دیں انہوں نے اپنے مداحوں کو پیغام دیتے ہوئے کہا کہ ایسی باتوں پر کان نہ دھریں۔

ثقافتی پروموٹر صابر خان کا کہنا تھا کہ ہم پاکستان کی ثقافت کو اجاگر کر رہے ہیں شہزادی سلطان نے جب سے میری کمپنی کے ساتھ معاہدہ کیا ہے اسکے بعد سماجی رابطوں کی ویب سائٹ پر ہراساں کیا جا رہا ہے اس سے پہلے بے شمار پاکستانی گلوکاروں کو ہراساں کیا جا چکا ہے یہ باعث تشویش ہے میں گریٹر مانچسٹر اور لنکا شائر پولیس کے ساتھ رابطے میں ہوں پولیس اس بارے تحقیقات کر رہی اور مانچسٹر کونسل نے بھی اس معاملے بارے مکمل تعاون کی یقین دہانی کروائی ہے ۔ ان کا کہنا تھا کہ ہراساں کرنے کے کیا عزائم ہیں اس بارے کچھ نہیں کہ سکتا یہ سب سائبر کرائم اور پولیس کی تحقیقات مکمل ہونے کے بعد ہی معلوم ہو گا لیکن ثقافت کسی بھی ملک کی ہو اس پر اس طرح حملہ کرنا ناقابل برداشت ہے ایسے افراد کو کڑی سزا ملنی چاہیے تاکہ وہ معاشرے میں تفریق پیدا نہ کر سکیں ۔

وزیراعظم آزاد کشمیر کے برطانیہ میں کوآرڈینیٹر راجہ مقصود حسین کاکڑوی نے شہزادی سلطان کے ساتھ اظہار یکجہتی کرتے ہوئے کہا کہ وہ پاکستان کی ثقافت کو اجاگر کرنے اور پاکستان میں یتیم بچوں کی کفالت کے لیے نیک کام کے لیے سرگرم عمل ہیں انہیں ہراساں کرنے کی سخت مذمت کرتا ہوں اور شہزادی سلطان جو یتیم بچوں کے لیے چیرٹی کام کر رہی ہیں انکے ساتھ ہیں اور ہر طرح کی ممکن مدد کریں گے ثقافت کی کوئ سرحد نہیں ہوتی ایسے میں امریکی نژاد بھارتی شہری کا پاکستانی گلوکاروں کا ہراساں کرنا باعث تشویش ہے۔

50% LikesVS
50% Dislikes