کورونا وبا کشمیر سمیت دنیا کی مظلوم اقوام بارے عالمی طاقتوں کے دوہرے معیار کی سزا ہے؛ پیر ابو مقصود مدنی – Kashmir Link London

کورونا وبا کشمیر سمیت دنیا کی مظلوم اقوام بارے عالمی طاقتوں کے دوہرے معیار کی سزا ہے؛ پیر ابو مقصود مدنی

اولڈہم (محمد فیاض بشیر) کشمیری قوم پچھلے بہتر برسوں سے بھارتی سرکار کے ظلم و ستم کی چکی میں پس رہی ہے دیڑھ سال سے مقبوضہ کشمیر کے اندر مودی سرکار نے جنگل کا قانون نافذ کر کے کشمیری عوام کے بنیادی انسانی حقوق سلب کرنے کے ساتھ کشمیر کی متنازع حیثیت کو خودساختہ قانون کے تحت بھارت کا حصہ قرار دیا اس سے بڑی ستم ظریفی اور کیا ہو سکتی ہے کہ عالمی طاقتیں،اقوام متحدہ اور انسانی حقوق کی علمبردار تنظیموں نے صرف مذمت کی حد تک احتجاج کیا عملی اقدامات نہیں اٹھائے جسکی وجہ سے بھارت کی ہٹ دھرمی مذید بڑھ گئی۔

ان خیالات کا اظہار کشمیری قوم سے اظہار یکجہتی کے موقع پر اداراہ نور السلام فیصل آباد و اولڈہم کے سرپرست اعلیٰ پیر ابو احمد محمد مقصود مدنی نے اپنے ایک خصوصی بیان میں کیا۔ انکا کہنا تھا کہ دنیا کے اس دوہرے معیار کی وجہ سے ہی جو کائنات کا مالک و خالق ہے اس نے ناانصافی کے خلاف اپنا فیصلہ سناتے ہوئے دنیا میں ایک ایسی وبا بھیجی جس سے پوری دنیا کا نظام مفلوج ہو کر رہ گیا انسانیت کے لیے اس سے بڑھ کر اور کیا آزمائش ہو سکتی ہے آج بھی اگر ہم دنیا میں مساوات اور انصاف کا نظام رائج کر دیں تو واحدہ لا شریک کی ذات اقدس ضرور انسانیت پر اپنا کرم کرے گی مقبوضہ کشمیر میں بھارتی سرکار نے جو ظلم و ستم کا بازار گرم کیا ہوا ہے سوچ کر رونگھٹے کھڑے ہو جاتے ہیں لیکن کشمیری قوم پر آفرین وہ جواں مردی اور جرآت سے بھارتی سرکار کا مقابلہ کرتے ہوئے اپنے پیدائشی حق خودارادیت کا علم آگے سے مذید جوش و جذبے سے بلند کیے ہوئے ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ ہم بحیثیت پاکستانی کشمیری قوم کے کندھے سے کندھا ملائے ساتھ کھڑے ہیں مودی سرکار اپنے اوچھے ہتھکنڈوں سے کشمیری قوم کو انکے پیدائشی حق خودارادیت لینے سے روک نہیں سکتا بلکہ اب کشمیر کی آزادی کا سورج جلد طلوع ہونے والا ہے پاکستان کی مسلح افواج بھارت کے مذموم عزائم کو خاک میں ملا دے گی اور پوری قوم اپنی فوج کے ساتھ دشمن کو شکست فاش دینے کے لیے یک زبان ہے اور کسی بھی قربانی سے دریغ نہیں کرے گی۔

50% LikesVS
50% Dislikes