سویڈش سائینسدانوں کی حیرت انگیز ایجاد، شمسی توانائی کو 18سال تک محفوظ رکھا جاسکے گا – Kashmir Link London

سویڈش سائینسدانوں کی حیرت انگیز ایجاد، شمسی توانائی کو 18سال تک محفوظ رکھا جاسکے گا

لندن (کشمیر لنک نیوز) اس امر میں کوئی شک نہیں کہ آنے والا وقت شمسی توانائی پر بہت زیادہ انحصار کرے گا لیکن موجودہ دور میں اس حوالے سے سب سے زیادہ مسائل اسے سٹور کرنے میں درپیش ہیں۔
سویڈن میں سائینسدانوں کی ایک ٹیم نے دعویٰ کیا ہے کہ انہوں نے اس مسئلے کا حل تلاش کرلیا ہے اور یہ حل سولر تھرمل پینلز کی صورت میں واضع کیا گیا ہے۔

سویڈش سائینسدانوں کا کہنا ہے کہ ان پینلز سے شمسی توانائی کو 18سال تک محفوظ کیا جاسکتا ہے۔ سوئیڈن کی چالمرز یونیورسٹی آف ٹیکنالوجی کے ماہرین کو سولر تھر مل فیول کی تیاری میں ایک سال سے زائد کا عرصہ لگا۔

شمسی توانائی محفوظ کرنےوالےآلے کو مالیکیولر سولر تھرمل انرجی اسٹوریج سسٹم کا نام دیاگیاہے۔ گول گھومنے والا آلہ تھرمل فیول کو شفاف ٹیوبز میں پمپ کرتاہے اور سورج کی روشنی کو جمع کرکے محفوظ کرلیتاہے۔

حیرت انگیز طورپر توانائی فیول کےٹھنڈاہونے پر بھی اتنی ہی طاقت ور رہتی ہے، یہ مائع فیول فی کلو گرام 250 واٹ انرجی محفوظ رکھنےکی صلاحیت رکھتاہے۔

جدید دریافت سے یقینی طور پر انسانوں کو بہت سے فوائد حاصل ہونگے کیونکہ توانائی ایک ایسا ذریعہ ہے جسے روزمرہ زندگی میں بہت زیادہ استعمال میں لایا جاتا ہے۔

50% LikesVS
50% Dislikes