قاسم سوری کی قیادت میں آسٹریا کے دورے پر آئے پاکستانی پارلیمانی وفد کے اعزاز میں سفیر پاکستان کا عشائیہ – Kashmir Link London

قاسم سوری کی قیادت میں آسٹریا کے دورے پر آئے پاکستانی پارلیمانی وفد کے اعزاز میں سفیر پاکستان کا عشائیہ

ویانا (کشمیر لنک نیوز) آسٹریا کے دارالحکومت ویانا میں سفیر پاکستان آفتاب احمد کھوکھر نے اپنی رہائش گاہ پاکستان ہاؤس پر اراکینِ پارلیمان کے اعزاز میں عشائیہ دیا۔ پاکستان کے یہ اراکین پارلیمنٹ ڈپٹی سپیکر قاسم سوری کی قیادت میں سرکاری دورے پر آجکل آسٹریا میں ہیں۔ واضع رہے پاکستان کا کراس پارٹی پارلیمانی وفد ڈپٹی سپیکر قومی اسمبلی قاسم سوری کی قیادت میں اقوام متحدہ کے ایراہتمام ویانا میں منعقدہ پانچویں عالمی سپیکر کانفرنس میں شرکت کیلئے آسٹریا آیا تھا۔

عشائیہ میں ڈپٹی اسپیکر قومی اسمبلی قاسم خان سوری، چیف وہپ رکن قومی اسمبلی پی ٹی آئی ملک عامر ڈوگر، رکن قومی اسمبلی ارباب شیر علی خان، پیپلز پارٹی کی سینئر رہنما سابق چیئرمین سینیٹ اور سینیٹر رضا ربانی، پیپلز پارٹی کی سینئر رہنما سینیٹر شیری رحمٰن، رکن قومی اسمبلی پی پی پی نفیسہ شاہ اور رکن قومی اسمبلی سائرہ بانو اور قومی اسمبلی سیکرٹریٹ کے ملازمین نے شرکت کی۔

دریں اثنا قاسم سوری نے اٹلی کے چیمبر آف ڈپٹیز کے صدر رابرٹو فیکو سے بھی ملاقات کی جس میں سفیر پاکستان بھی موجود تھے۔ قاسم خان سوری نے کہا کہ پاکستان اٹلی کے ساتھ تعلقات کو مزید گہرا کرنے کو بہت اہمیت دیتا ہے۔ انہوں نے کوویڈ 19 کے دوران وزیر اعظم عمران خان کی سمارٹ لاک ڈاؤن پالیسی کی تاثیر کے بارے میں آگاہ کیا۔ معاشرے کے غریب اور محروم طبقات کی ترقی کے لیے حکومت کی کوششوں کے بارے میں بات کرتے ہوئے قاسم خان سوری نے کہا کہ ان کی حکومت نے اپنے احساس ایمرجنسی کیش پروگرام کے ذریعے 15 ملین خاندانوں کو 203 ارب روپے تقسیم کیے۔

انہوں نے کہا کہ افغانستان میں امن اور استحکام پاکستان اور خطے کے لیے ناگزیر ہے۔ انہوں نے کابل میں ایک جامع حکومت پر زور دیا جو افغانستان کے تمام طبقات کی نمائندگی کرے اور بنیادی حقوق بشمول خواتین کے حقوق کا احترام کرے۔انہوں نے کہا کہ پاکستان افغانستان میں مزید عدم استحکام کا متحمل نہیں ہو سکتا جس کی وجہ سے مزید مہاجرین کی آمد اور سیکورٹی کے دیگر سنگین چیلنجز ہیں۔

اطالوی رابرٹو فیکو نے کہا کہ آسٹریا پاکستان کے ساتھ اپنے تعلقات کو بہت اہمیت دیتا ہے۔ انہوں نے افغانستان سے کئی ممالک کے شہریوں کو نکالنے میں پاکستان کے سہولت کار کردار کی تعریف کی۔انہوں نے کہا کہ اطالوی حکومت موسمیاتی تبدیلی سے متعلق کانفرنس آف پارٹیز (COP 26) کی پری COP پارلیمانی میٹنگ میں پاکستان سے پارلیمانی وفد کے منتظر ہے جو کہ روم اٹلی میں 8-9 اکتوبر کو منعقد ہونے والا ہے۔

50% LikesVS
50% Dislikes