لوگ پیاروں کو دفنا رہے تھے اور آپ دوستوں کیساتھ گلچھڑے اڑا رہے تھے، ناز شاہ ایم پی وزیر اعظم پر خفا – Kashmir Link London

لوگ پیاروں کو دفنا رہے تھے اور آپ دوستوں کیساتھ گلچھڑے اڑا رہے تھے، ناز شاہ ایم پی وزیر اعظم پر خفا

لندن (کشمیر لنک نیوز) برطانیہ کے وزیراعظم بورس جانسن کی حکومت کو لاک ڈاؤن کے قوانین کی خلاف ورزی پر ایک اور سکینڈل کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔میڈیا کے مطابق پولیس نے کہا ہے کہ کورونا قواعد کی خلاف ورزی کرتے ہوئے 10 ڈاؤننگ سٹریٹ یعنی وزیراعظم ہاؤس میں ہونے والی تقریب کے دوران درجنوں اعلیٰ حکام کی شرکت کے خلاف تحقیقات کر رہی ہے۔مئی 2020 میں وزیراعظم بورس جانسن نے مبینہ طور پر اپنی سرکاری رہائش گاہ کے لان میں غیر رسمی پارٹی کا اہتمام ایسے وقت میں کیا تھا جب حکومت کی جانب سے اجتماع پر پابندی عائد تھی۔

پیر کی رات گئے منظر عام پر آنے والی ایک ای میل میں یہ بات سامنے آئی تھی کہ اعلیٰ حکومتی عہدیدار مارٹن رینولڈز نے 10 ڈاؤننگ سٹریٹ سے منسلک ایک سو سے زائد ساتھیوں کو ایک تقریب میں شرکت کی دعوت دی تھی جس میں وزیراعظم اور ان کی اہلیہ نے بھی شرکت کی۔10 ڈاؤننگ سٹریٹ میں ہونے والی تقریبات سے متعلق اسی نوعیت کے الزامات گزشتہ ماہ بھی سامنے آئے تھے جو کرسمس 2020 کے قریب لگنے والے لاک ڈاؤن کے دوران منعقد کی گئی تھیں۔

اس سکینڈل نے وزیراعظم بورس جانسن کو مجبور کیا تھا کہ وہ ایک اور اعلیٰ عہدیدار سو گرے کو عہدے پر تعینات کریں جنہیں ان الزامات کی تحقیقات کی ذمہ داری سونپی گئی ہے۔لندن پولیس کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ مئی میں ہونے والی پارٹی کے لیے ممکنہ طور پر لاک ڈاؤن کے قوانین کی خلاف ورزی سے متعلق پوچھ گچھ کی جا رہی ہے۔وزیراعظم بورس جانسن نے اس حوالے سے لاعلمی کا اظہار کیا ہے کہ عالمی وبا کے دوران 10 ڈاؤننگ سٹریٹ نے کسی قسم کے قواعد کی خلاف ورزی کی ہے۔

حکومتی عہدیدار مارٹن رینولڈز نے مئی 2020 میں بھیجی جانے والی ای میل میں لکھا تھا کہ انتہائی مصروف عرصے کے بعد اس خوبصورت موسم میں 10 ڈاؤننگ سٹریٹ کے لان میں سماجی فاصلہ رکھتے ہوئے مشروبات کا اہتمام کریں۔یہ ای میل ایسے وقت پر بھیجی گئی تھی جب برطانوی شہری اپنے پہلے لاک ڈاؤن سے گزر رہے تھے اور کسی قسم کے آؤٹ ڈور سماجی اجتماع پر پابندی عائد تھی۔

برطانوی حزب اختلاف لیبر پارٹی نے اس ایشو کو بڑی سنجیدگی سے لیا ہے لیبر لیڈر کیئر ستارمر سمیت متعدد ممبران پارلیمنٹ نے بورس جانسن سے اس غیر ذمہ داری کے مظاہرے پر مستعفی ہونے کا مطالبہ کیا ہے۔ پاکستانی نژاد برطانوی رکن پارلیمنٹ ناز شاہ ڈاؤننگ اسٹریٹ کی گارڈن پارٹی کے معاملے پر پارلیمنٹ میں برس پڑیں۔ انھوں نے کہا کہ لاک ڈاؤن میں بورس جانسن اپنی اہلیہ اور 40 افراد کے ساتھ پارٹی کررہےتھے، جبکہ میرے حلقے میں لوگ پیاروں کی تدفین میں بھی شریک نہیں ہوسکتے تھے۔ ناز شاہ کا کہنا تھا کہ 20 مئی کومیکسین ایلیٹ کی والدہ کی تدفین میں 10 افراد کو شرکت کی اجازت تھی۔ کیا منسٹر، وزیراعظم کوکہیں گے کہ وہ میکسین کے اہل خانہ سے ذاتی طور پر معذرت کریں۔ منسٹر مائیکل ایلیس نے کہا کہ متعلقہ خاندان سے ہمدردی ہے، پابندیاں عوام کے تحفظ کیلئے لگائی گئی تھیں۔

50% LikesVS
50% Dislikes